29 اپریل کا مینار پاکستا ن جلسہ چیلنج بن گیا: بنی گالہ سے تازہ ترین اطلاعات موصول

راولپنڈی (ویب ڈیسک ) پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے مئی کے پہلے ہفتے تک ملک گیر رابطہ عوام مہم شروع کرکے اپنی انتخابی مہم کی رفتار تیز کرنے کی تیاری کرلی ہے، ماہ رمضان میں افطار پارٹیوں سے سیاسی گرما گرمی جاری رکھی جائے گی جبکہ عید کے

بعد وہ اسی رفتار سے دوبارہ رابطہ عوام مہم پر نکل کھڑے ہوں گے۔ 2011 ء میں30 اکتوبر کو مینار پاکستان کے جلسہ عام سے ملکی سیاست میں اونچی اڑان بھرنے والے پی ٹی آئی قائد کیلئے29 اپریل کو اسی جگہ جلسہ کرنا بڑا چیلنج بن گیا جس کیلئے عمران خان نے ممبر سازی کیمپوں کے دورے ، کراچی اور سندھ کے شہروں میں جلسے ، خیبر پختونخواہ میں پارٹی قائدین سے ملاقاتوں اور اسلام آباد میں سیکٹر ای الیون میں تحریک انصاف کی سنٹرل ایگزیکٹو کمیٹی کا اجلاس منعقد کرنے کے پیچھے بھی دراصل لاہور جلسے کی تیاریوں اور اس میں کارکنوں کی شرکت بڑھانے کیلئے ڈیوٹیاں بھی سونپی گئیں چیئرمین عمران خان چاہتے ہیں کہ انہیں2011 ء سے بڑا کرائوڈ ملے اس حوالے سے ممبر سازی کیمپوں میں اجتماعات سے خطاب کرکے بھی انہوں نے مجموعی اندازے لگائے کہ لاہور میں کتنے لوگ جمع ہوں گے تحریک انصاف کے مرکزی، صوبائی، مختلف علاقوں اور ڈویژنل اور ضلعی عہدیداروں کو بھی ان کی ڈیوٹیاں ملنا شروع ہوگئی ہیں۔ چیئرمین تحریک انصاف نے جمعرات کو سنٹرل ایگزیکٹو کمیٹی کے اجلاس میں بھی مرکزی قائدین کو لاہور جلسے کو کامیاب بنانے کا پیغام کھل کر دے دیا عمران خان کسی پارٹی لیڈر یا عہدیدار کو غلطی اور سستی کی کوئی گنجائش دینے کو تیار نہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں